ہم لوگ اقراری مجرم ہیں.....

Published on by KHAWAJA UMER FAROOQ




ہم لوگ اقراری مجرم ہیں
ہم لوگ اقراری مجرم ہیں
سن ائے جباری مجرم ہیں
حق گوئی بھی ہے جرم کوئی
توپھر ہم ہاری مجرم ہیں...
سن ہم سے دورطاغوتی، طاغوتوں سے بیزار ہیں ہم
جب نگری اندھی نگری ہے، تو اےراجہ غدار ہیں ہم
انگریز کے ترکے میں جو ملا، اس مذہب کے ہم باغی ہیں
اس جرم پہ جو دی جائے سزا، سہنے کے لیے تیار ہیں ہم
ہم لوگ اقراری مجرم ہیں
ہم لوگ اقراری مجرم ہیں
سن ائے جباری مجرم ہیں
حق گوئی بھی ہے جرم کوئی
توپھر ہم ہاری مجرم ہیں
چمگاڈر جس سے چڑھتے ہیں،اس صبح کا آغازہیں ہم
اندھیرے جس کے دشمن ہیں اس سورج کا اک راز ہیں ہم
ائے قبر ماضی کے مردوں،مستقبل کی اک لہر ہیں ہم
محکومی کی اولاد ہو تم آزادی کی آواز ہیں ہم

Comment on this post